’’ حفیظ شیخ کی شکست اگر درست تھی تو یوسف رضا گیلانی کی شکست بھی درست ہے‘‘اپوزیشن جماعتوں کو کرارا جواب

اسلام آباد (این این آئی)پاکستان نہ کھپے کا نعرہ لگانے والوں کو قوم جواب دینے کو تیار ہے ، پاکستان کھپے نعرہ نہیں ایمان کا حصہ ہے ، افسوس ہے ایک اسمبلی کا ممبر پاکستان توڑنے کی بات کر رہا ہے ، مدارس عربیہ میں جدید تعلیم کے معاہدے پر مکمل عمل ہو گا، مدارس کے طلباء کی اسناد کے معاملہ پر پریشانی ختم ہو گئی ہے ، آئندہ سال سے وفاقوں سے متصل تمام مدارس کی اسناد کو تمام ملک کےادارے تسلیم کریں گے ، خواتین مارچ میں توہین مذہب و توہین رسالت کے حوالے سے مکمل تحقیات ہوں

گی   توہین ناموس رسالت و توہین مذہب کے قانون کا کسی کو غلط استعمال نہیں کرنے دیں گے ، توہین ناموس رسالت و توہین مذہب کے قانون کا غلط استعمال نہیں ہو رہا ہے ، موجودہ حکومت نے مدارس کی تعلیم کو سرکاری سطح پر تسلیم کیا ہے۔ یہ بات چیئرمین پاکستان علماء کونسل و نمائندہ خصوصی وزیر اعظم برائے بین المذاہب ہم آہنگی و مشرق وسطیٰ حافظ محمد طاہر محمود اشرفی نے جامعہ مدنیہ راولپنڈی میں علماء و مشائخ کنونشن سے خطاب کرتے ہوئے کہی ، اس موقع پر مولانا اسد زکریا قاسمی ، مولانا نعمان حاشر ، مولانا طاہر عقیل اعوان، مولانا حفیظ الرحمن ، مفتی ناصر ، مولانا ابو بکر حمید صابری ، مولانا الیاس مسلم ، مولانا احسان احمد حسینی ، مولانا قاسم قاسمی اور دیگر علماء و مشائخ نے بھی خطاب کیا۔ حافظ محمد طاہر محمود اشرفی نے کہا کہ ایک گروہ سیاسی مقاصد کیلئے مدارس اور مساجد کو استعمال کرنا چاہتا ہے۔ مدارس و مساجد نے ملک کے اندر انتشار پھیلانے والوں کو مسترد کر دیا ہے۔موجودہ حکومت مدارس و مساجد کی چوکیدار ہے ، موجودہ دور حکومت میں مدارس مضبوط ہوئے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ عورت مارچ میں خلاف آئین و قانون جو عمل ہوا اس پر قانون کے مطابق کارروائی ہو گی ، توہین مذہب و توہین ناموس رسالت کے نعروں اور پمفلٹوں سےعورت مارچ کے منتظمین اعلان لاتعلقی کر رہے ہیں۔ وزارت داخلہ کو لکھا ہے کہ مکمل تحقیقات کروائی جائیں تا کہ اصل صورتحال سامنے آئے۔ انہوں نے کہا کہ پیغام اسلام تشدد سے نہیں محبت سے پھیلا ہے ، فتنوں کا مقابلہ اعتدال سے ہو سکتا ہے ، تشدد سے نہیں۔ انہوں نے کہا کہ انتہا پسند عناصر مدارس و مساجد اور اسلام کی بدنامی کا سبب بنتے ہیں۔ کنونشن اور ذرائع ابلاغ سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ مدارس و مساجد کسی لانگ مارچ میں شریک نہیں ہو رہے ہیں۔ قوم نے سینیٹ انتخابات میں دیکھ لیا ہے کہکس طرح خرید و فروخت ہوئی ، انہوں نے کہا کہ حفیظ شیخ کی شکست اگر درست تھی تو یوسف رضا گیلانی کی شکست بھی درست ہے۔ ایک اور سوال کے جواب میں حافظ محمد طاہر محمود اشرفی نے کہا کہ پاکستان کھپے نعرہ نہیں ہے پاکستانی کے ایمان کا حصہ ہے ، افسوس ہے کہ ایک ممبر قومی اسمبلی نے بہت نا مناسب الفاظ استعمال کیے ، قوم اس طرح کی باتوں کا خود حساب لے گی۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *