’’جاوید لطیف کے خلاف غداری کا مقدمہ نہیں بن سکتا‘‘ پی ٹی آئی سینیٹر لیگی رہنما کی حمایت میں سامنے آگئے

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک /آن لائن)پی ٹی آئی کے سینیٹر بیرسٹر علی ظفر جاوید لطیف کی حمایت کود پڑے ۔تفصیلات کے مطابق تحریک انصاف کے سینیٹر بیرسٹر علی ظفر کا کہنا ہے کہ ن لیگ کے سینئر رہنما جاوید لطیف کے خلاف غداری کا مقدمہ نہیں بن سکتا۔ن لیگ کےجاوید لطیف اور پیپلز پارٹی کے مصطفیٰ نواز کھوکھر نے شہباز گل کے ساتھ لاہور میں پیش آنے والے واقعے کو قابل مذمت قرار دے دیا۔دوسری جانب مسلم لیگ (ن) کے ایم این اے جاوید لطیف کے خلاف اندراج مقدمہ کی درخواست دائر کردی گئی۔ تفصیلات کے مطابق لیگی رہنما اور

ایم این اے جاوید لطیف کے خلاف اندراج مقدمہ کیلئے درخواست شہری چوہدری محمد اکرم کی جانب سے سی سی پی او لاہور سمیت پاکستان سیٹزن پوورٹل پر بھی دی گئی ہے۔درخواست میں مؤقف پیش کیا گیا ہے کہ جاوید لطیف نے نجی ٹی وی پر دھمکی دی تھی کہ اگر مریم نواز کو کچھ ہوا تو وہ پاکستان کھپے کا نعرہ نہیں لگائیں گے، ان کا بیان ریاست پاکستان سے بغاوت کے مترداف ہے، جس سے عوام کے جذبات شدید مجروح اور عوام مشتعل ہوئے۔درخواست کے متن میں ہے کہ لیگی رہنما نے پاکستان کھپے کا نعرہ نہ لگانے کے جو عْذرات پیش کیے ہیں وہ عْذر گناہ بدتر از گناہ کے زمرے میں آتے ہیں، ان کے خلاف ریاست کے خلاف بغاوت، اپنے حلف کی خلاف ورزی کے سنگین جرائم کی دفعات کے تحت قرار واقعی قانونی کاروائی کی جائے۔ اور ان کے خلاف قانون کی تمام متعلقہ دفعات کے تحت ایف آئی آر کا اندراج کیا جائے اور انہیں فوری گرفتار کیا جائے۔۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *