ملک بھر میں 15 روزہ مکمل لاک ڈائون کے علاوہ کوئی چارہ نہیں حکومتی اقدامات کو ناکافی قرار دیتے ہوئے اہم مشورہ دیدیا گیا

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک، آن لائن)پاکستان میڈیکل ایسوسی ایشن نے کہا ہے کہ15روزہ مکمل لاک ڈائون کے علاوہ کوئی چارہ نہیں ۔لوگ زندہ رہیں گے تو معاشی سرگرمیاں بھی بحال ہو جائیں گی۔ان خیالات کا اظہار پی ایم اے پنجاب کے صدر پروفیسر ڈاکٹر اشرف نظامی کی صدارتمیں ہونے والے ہنگامی اجلاس میں کیا گیا۔اجلاس میں دیگر سینئر پروفیسر اور عہدیداران نے بھی شرکت کی۔عہدیداران کا کہنا تھا کہ کورونا خوفناک حد تک پھیل رہا ہے۔حکومت کو بڑھتے ہوئے مریضوں اور ہلاکتوں کا ادراک نہیں۔حکومتی اعلانات ناکافی اور آنے والے دنوں میں مزید ہلاکتوں کا باعث بنیں گے۔سرکاری ٹرانسپورٹ کی بندش

اور غیر سرکاری ٹرانسپورٹ کو اجازت دینا مضحکہ خیز فیصلہ ہے۔دوسری جانبجمعیت علماء اسلام نے کورونا ویکسین کا معاملہ ایوان میں اٹھانے کا فیصلہ کرتے ہوئے سینیٹر کامران مرتضیٰ نے ویکسین سے متعلق قرارداد سینٹ میں جمع کروادی ۔ قرارداد میں کہا گیا ہے کہ تمام ممالک میں شہریوں کو کرونا ویکسین لگائی جارہی ہے، اکثر ممالک میں ویکسی نیشن فری لگائی جارہی ہے، پاکستان میں ویکسینیشن بہت مہنگی ہے، پاکستان نے ویکسین منگوانے کیلئے پرائیوٹ کمپنی کو ٹھیکہ دیا ہوا ہے ۔پاکستان میں ویکسینیشن 8 ہزار چارسو روپے ہے جبکہ دیگر ممالک میں ویکسین کی قیمت پندرہ سو روپے ہے، قرارداد میں کہا گیا ہے کہ یہ آئین کے آرٹیکل 38 کی خلاف ورزی ہے،آرٹیکل 38 میں واضح ہے کہ ریاست اپنے شہریوں کو بنیادی حقوق فراہم کرے، حکومت کو اپنے فیصلے پر نظرثانی کرنی چاہئے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *