نامعلوم افراد کی دہشت گردی عدالت کے جج کی گاڑی پر فائرنگ ، جج اپنے اہل خانہ سمیت شہید

پشاور/صوابی(این این آئی)خیبرپختونخوا کے ضلع صوابی میں گاڑی پر فائرنگ کے نتیجے میں انسداد دہشت گردی عدالت کے جج آفتاب آفریدی، بیوی اور دو بچوں سمیت جاں بحق ہوگئے۔ پولیس کے مطابق جسٹس آفتاب آفریدی اتوار کی شام اپنے خاندان کے ہمراہ گاڑی میں پشاور سے اسلام آباد جارہے تھے جب ان کی گاڑی صوابی انٹر چینج کے قریب دریائے سندھ کے پل کےمقام پر پہنچی تو نامعلوم افراد نے گاڑی پر فائرنگ کر دی جس کے نتیجے میں گاڑی میں سوار اے ٹی سی جج آفتاب آفریدی، اہلیہ اور 2 بچوں سمیت شہید ہوگئے۔پولیس کے مطابق فائرنگ سے جج

کے 2 سیکیورٹی گارڈزبھی زخمی ہوئے ہیں جبکہ لاشوں اور زخمیوں کو اسپتال منتقل کردیا گیا۔پشاور ہائیکورٹ کی ویب سائٹ پر دستیاب معلومات کے مطابق جج آفتاب آفریدی سوات کی انسداد دہشت گردی کی عدالت میں تعینات تھے جبکہ ان کی پوسٹنگ 13 فروری 2021 کو ہوئی تھی۔‎

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *