شریف فیملی کو عدالت سے بڑا ریلیف مل گیا پنجاب حکومت کو کارروائی سے روک دیا گیا

لاہور( این این آئی)لاہور کی مقامی عدالت نے پنجاب حکومت کو رائیونڈ زمین کے انتقال کی منسوخی سے متعلق کارروائی سے روک دیا۔نواز شریف کے بھائی عباس شریف مرحوم کے بچوں نے پنجاب حکومت کی کارروائی پر لاہور کی سول عدالت سے رجوع کیا تھا ۔ سول عدالت کے جج سید فہیم الحسن نے درخواست سماعت کے لئے منظور کرکے27 اپریل کو تمام فریقین کو متعلقہ ریکارڈ سمیت طلب کر لیا۔درخواست گزاروں کی جانب سے موقف اپنایا گیا کہ پنجاب حکومت نے شریف خاندان کی رائیونڈ رہائشگاہ کی 127 کنال اراضی کا انتقال منسوخ کردیا تھا۔حکومت غیرقانونی طورپرجاتی امراء کی

1500 سے زائد کنال زمین کی ملکیت تبدیل کررہی ہے۔پنجاب ریونیو ڈپارٹمنٹ نے اس زمین کا انتقال واپس حکومت پنجاب کے نام کردیا ۔دریں اثنا احتساب عدالت نے شہباز شریف فیملی کے خلاف منی لانڈرنگ ریفرنس کی سماعت 4 مئی تک ملتوی کر دی ،پنجاب اسمبلی میں قائد حزب اختلاف حمزہ شہباز کی ایک روزہ حاضری معافی کی درخواست منظور کر لی گئی۔دوران سماعت شہباز شریف کوامن و امان کی صورتحال کے پیش نظر پیش نہ کیا گیا جبکہ جیل کام نے شہباز شریف کے وارنٹ پیش کئے گئے۔ فاضل عدالت نے کہا کہ حمزہ شہباز ضمانت پر ہیں حاضری کے لیے پیش کیوں نہیں ہوئے ۔وکیل نے موقف اپنایا کہ حمزہ شہباز کی حاضری معافی کی درخواست دائر کررہا ہوں،حمزہ شہباز کو کمر میں شدید تکلیف ہے جس کے باعث وہ پیش نہیں ہوسکتے ۔عدالت نے کاروائی کچھ دیر کے لیے ملتوی کردی۔ دوبارہ سماعت شروع ہونے پر عدالت نے حمزہ شہباز کی ایک روز کی حاضری معافی کی درخواست منظور کرتے ہوئے کیس کی سماعت 4 مئی تک ملتوی کرتے ہوئے نیب کے گواہوں کو آئندہ سماعت پر دوبارہ پیش ہونے کا حکم دیدیا۔

Related Posts

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *