تحریک کے سربراہ کو رہا کرنے کا کوئی فیصلہ نہیں ہوا ، حکومت

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک )وفاقی حکومت کی جانب سے تحریک کے سربراہ کو رہا کرنے سے متعلق کوئی فیصلہ نہیں ہوا ہے ۔ ذرائع نے بتایا ہے کہ وفاقی وزیر داخلہ شیخ رشید احمد کل دوپہر 2بجے حکومتی ٹیم کی اور  تحریک کے مابین ہونے والے معاہدے سے متعلق تفصیلی پریس کانفرنس کریں گے ۔ نجی ٹی وی سماء کے ذرائع نے بتایا ہے کہ تحریک کے انسداد دہشتگردی کے
مقدمات واپسی نہیں ہونگے، جبکہ تحریک کے سربراہ کی رہائی سے متعلق ابھی تک کوئی فیصلہ نہیں کیا گیا ہے ۔ قبل ازیں تحریک کا لاہور میں مسجد رحمت للعالمین کے باہر دھرنا ختم

کرنے کا اعلان ۔تفصیلات کے مطابق  تحریک  نے قومی اسمبلی میں قرارداد پیش ہونے کے بعد اپنا لاہور میں مرکزی دھرنا ختم کر دیا ہے ۔تحریک کے کارکنا ن اور اعلیٰ قیادت پچھلے کئی دنوں سے مسجد کے باہر دھرنا دے کر بیٹھے تھے ۔ دوسری جانب  تحریک کے سربراہ کو لاہور کی کوٹ لکھپت جیل سے رہا کردیا گیا۔محکمہ جیل خانہ جات پنجاب کے تعلقات عامہ کے افسر عتیق احمد نےاس پیشرفت کی تصدیق کی۔نجی ٹی وی کے مطابق رہائی کے فوری بعد تحریک کے امیر یتیم خانہ چوک پہنچے جہاں ان کا کارکنان سے خطاب متوقع ہے،  تحریک کے سربراہ کی رہائی قومی اسمبلی کےاجلاس میں فرانسیسی سفیر کو واپس بھیجنے کی قرارداد پیش کیے جانے سے چند گھنٹے قبل سامنے آئی ہے۔خیال رہے کہ حکومت اور  تحریک کے مابین مذاکرات میں مثبت پیشرفت،جماعت کے سربراہ نے دھرنا ختم کرنے اور 20اپریل کو لانگ مارچ کی کال واپس لینے کی رضامندی ظاہر کر دی ہے ۔  تحریک کے امیر کی حکومتی مذاکراتی ٹیم کیساتھ کوٹ لکھپت جیل میں ملاقات ہوئی جس میں انہوں نے 20اپریل کولانگ مار چ کی کال کوواپس لینے کی حامی بھر لی ہے ۔ حکومت کی جانب سے مذاکراتی ٹیم میں وفاقی وزیر داخلہ شیخ رشید احمد ، وفاقی وزیر برائے مذہبی امور نور الحق ، گورنر پنجاب سمیت وزیر قانون پنجاب راجہ بشارت شامل تھے ۔

Related Posts

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *